بدھ, نومبر 21, 2012

گالی نما لوگ


کھلتا کسی پہ کیوں میرے کنجر ھونیکا معاملہ،
دوستوں کے انتخاب نے مشہور کیا مجھے :ڈ
یہاں جاپان میں اپ کو بہت سے ایسے بڑے ناموں والے لوگ مل جائیں گے جو کہ اصل میں چھوٹے لوگ ہیں
ان کے چھوٹے ہونے کی ایک دلیل یہ ہے کہ بندہ اپنی صحبت سے پہچانا جاتا ہے
یہ بڑے لوگ ہیں کہ ان کے اردگرد ہے لوگ چھوٹے ہیں
یہ لوگ بڑی باتیں کرتے ہیں کہ ان کے آس پاس کے لوگ کند ذہن ہیں
یہ لوگ بڑے علم والے ہیں کہ ان کے دوست بے علم ہیں
بس جی مختصر یہ کہ یہ لوگ بونوں میں عالم چنا بنے بیٹھے ہیں
اور اہل نظر کو یہ لوگ بھی بونوں میں بونے ہی لگتے ہیں
عظیم چینی مفکر اور فلسفی کہ جس میں چین کا پیغمبر کہتا ہوں
نے کہا تھا
خوش بخت لوگ اپنے کاموں کی وجہ سے جانے اور پہچانے جاتے ہیں
اور بد بخت لوگ
شہرت کے پیچھے بھاگتے ہیں،
اور
بدنامی انکا پیچھا کرتی ہے
 اس کی مثال کہ اپ دیکھ سکتے ہیں کہ
جاپان میں سستی شہرت بیچنے والی سائٹوں پر ان کی فوٹو لگی ہیں اور فوٹو لگوانے کے بہانے کے لئے احمقانہ بیانات لگے ہیں
کچھ سائٹوں والے پانچ ہزار ین اور کچھ دس ہزار لیتے ہیں ، "ان" کی کمپنی کے اشتہار کا۔
اور ان کے بیانات کی عوض "کھانا " کھاتے ہیں ریستورینٹوں میں
دوستوں کے انتخاب نے مشہور کیا ان کو
کھلتا کسی پہ کیوں ان کےچول ہونے کا راز
دوسری طرف
بقول کنفوشس کے خوش بخت لوگ بھی ہیں جی جاپان میں
ان خوش بخت لوگوں کے اردگرد بھی خوش بخت لوگ ہیں
یہ لوگ کام کر رہے ہیں
اور شہرت کے پیچھے نہیں بھاگتے
لیکن ان کو لوگ جانتے ہیں
بندہ اپنی محفل سے پہچانا جاتا ہے
ناں جی
خوش بخت لوگ اپنے دوستوں سے برابری کی بنیاد پر ملتے ہیں ایک دوسرے کو اچھے ناموں سے پکارتے ہیں
پیٹھ پیچھے دوستوں کی تعریف کرتے ہیں
جیسے کہ رقم بڑے دعوے سے کہا کرتا ہے کہ
میرے سارے دوست بڑے سیانے معتبر اور گریٹ لوگ ہیں
اور ان گریٹ لوگوں میں سے میں بھی ہوں
یہاں سوال پیدا ہوتا ہے کہ
اپ کن میں سے ہیں ؟؟
ان میں سے جو محفل سے اٹھ کر جانے والوں کو گالیاں دیتے ہیں
اور خود بھی گالیاں لایق ہوتے ہیں
یا کہ دوسری قسم کے لوگ؟؟
کہ
جو ایک دوسرے کو پرموٹ کرتے ہیں
اب جب کہ جاپان میں ایسوسی ایشن کے انتخابات انے والے ہیں
او ان میں ایک بندہ چنا جائے گا
جو کہ پھر ساری زندگی صدر ہی کہلوائے گا
کہ پھر کہاں ایمبیسی انتخاب کروائے گی
اور اگر یہ بندہ " وہ" والا منتخب ہو گیا ناں جی
تو پھر ساری کمیونٹی گالیان ہی کھانے والی بن جائے گی
کہ "اس " کی تو پہلے ہی عادت ہے کہ محفل سے اٹھ کر جانے والے کے متعلق کہتا ہے
چنگا ہویا مگروں لتھا
اب دیکیں کہ کمیونٹی پر کوئی خوش بخت آتا ہے
کہ
کوئی"گالی" بن کر اتا ہے جو کہ کمیونٹی کے لئے مستقل گالی ہو گا

کوئی تبصرے نہیں:

Popular Posts