سوموار، 11 فروری، 2008

نام دائے مون

آج کی خبروں میں آگ لگنے کی دو خبرں تهیں
ایک تو تهی برطانیه میں ایک مارکیٹ میں آگ لگنے کی
اس پر آگ پر اپ کو بہتت خبرین مل جائیں گی
اور دوسری تهی
جنوبی کوریا کے شہر سئیول میں لگنے والی خبر کی ـ
نام دائے مون


نام دائے مون کو آگ لگ گئی ہے
مون کہتے هیں دروازے کو
گیارویں صدی میں تعمیر هوا یه دروازه ہے جو که ایک بڑے سے چبوترے پر لکڑی کے کام کا شہکار تها
اس کو انیس سو باسٹھ میں دوباره مرمت کیا گيا تها
سئیول کے سٹی هال سے پیدل چند منٹ کے فاصلے پر واقع اس مون کے گرد ایک ٹریفک روٹری بنی هوئی ہے جس سے مختلف سڑکیں نکلتی هیں ـ
اس کے نزدیک هی نام دائے مون کے نام سے جانے والی نام دائے مون مارکیٹ بهی ہے ـ
میں اپنے کوریا کے سفر میں اس مارکیٹ سے ارٹیفشل جیولری خرید کر بیچا کرتا تها
اور عموماً جب بهی کوئی جاپانی دوست ساتھ هوتا تها تو اس مارکیٹ کی ریهڑیوں والوں سے کهانے خرید کر کهایا کرتے تهے ـ
اس مارکیٹ میں چند دوکانیں ایسی بهی هیں جن کے سامنے سوّر کے سر کو پکا کر دوکان کے سامنے سجا کر رکها جاتا ہے
میں ہمیشه ان دوکانوں کے سامنے سے کترا کر گزر جایا کرتا تها
اور ساتھ چلنے والے جاپانی اور کورین دوست ہنسا کرتے تهے
یہان ایک بے بے جی کو دیکها جس نے لوهے که ایسی کرسی بنائی هوئی تهو جس کے اندر گرم پانی حرکت کرکے اس گرم رکهتا تها ـ
یاد رہے که سئیول میں سردیوں میں مائینس دس گیاره درجه حرارت عام سی بات هے
سردیوں میں مچهلیاں اور گوشت بیچنے والے ان کو ایسے هی رکھ کر بیٹھیے هوتے هیں اور یه سبزیاں اور مچھلیاں منجمد هوچکی هوتی هیں ـ
اس مارکیٹ نام دائے مون میں کچھ بوڑهی عورتیں کرنسی کا کاروبار کرتی هیں
پچاس سے ساٹھ سال کی عمر کی یه خواتین کرنسی کے لفافے بهر کے گلیوں میں بیٹھی هوتی هیں
لیکن کوئی چهینا جھپٹی یا لوٹ کهسوٹ نهیں هے
میں نے بهی ان خواتین سے کئی دفعه دسیوں هزاروں ڈالروں کا لین دین کیا ہے ـ
عینکیں اور کونٹیکٹ لینز اتنے سستے هیں که جاپانی دوستوں کا تو تراھ هی نکل جایا کرتا تها
یعنی جو عینک جاپان میں ایک لاکھ ین میں بنتی ہے وه نام دائے مون میں دس ہزار میں بن جایا کرتی تهی
سیدها سیدها ایک صفر اتارنے والی بات هوا کرتی تهی ـ
مجهے یاد ہے که میں نے کینون کا کیمره ٹھیک کروانا تها
اور جاپان میں اس پر تیس هزار ین
یعنی تین سو ڈالر خرچ آتا تها مگر کوریا میں نام دائے مون کے کاریگروں نے صرف تیس ڈالر میں ٹهیک کردیا تها

نام دائے مون نام کی اس مارکیٹ کی وجه اور کورین لوگوں کا فخر یه یاد گار جل گئی ہے
ابهی تک آگ لگنے کی وجه کا معلوم نهیں هوا ہے
اس میں کو لگنے والی آگ کورین لوگوں کے لیے ایسی هی هے جیسا که نیویارکروں کے لیے ٹوین ٹاورز کا گرنا

کوئی تبصرے نہیں:

Popular Posts