اتوار, دسمبر 30, 2007

بدلتےموسم

فضا تیار کی جارهی ہے نئے آرمی چیف کے حکومت سنبھالنے کی ـ


فوج کو قدم بڑھانے کی دعوت ہے جی 
یا
بدلتے موسم یا ایک هی موسم کے تسلسل کی خبر ہے 
فوجی سرغنه اور چمچے چوروں کا موسم ؟
پاکستان اس موسم کا تسلسل اٹھاون سے دیکھ رها ہے 
عجیب واہیات موسم ہے که کھنبیوں کی طرح سیاستدان اگائے جاتے هیں اور فوج کا سایه ہٹتے هی مرجھا جاتے هیں ـ
اس موسم کی الرجی ہے که غربت نام کی پھپھوندی پڑھتی هی جارهی ہے ـ
بے علمی اور تربیت گے انحطاط کی وباء پھلی هوئی ہے 
اب جی کیانی صاحب هی حکومت سنبھالیں گے اور مشرف صاحب کی نا اہلی کی باتیں هوں گی اور حالات کو سنبھالنے کا اس کے سوا اور کوئی چارا نه هونے گو پروپیگینڈا کیے جائیں گے ـ
یه سارے حالات اسی طرف اشارے کر رہے هیں جیسا که ایجینسیوں کی مدد سے اب تک گے ڈکٹیٹر کرتے ائے هیں ـ
اللّه نه کرے که میرا یه اندازه ٹھیک هو
مگر کیانی صاحب کے جاننے والے محفلوں میں پھیل پھیل کر بیٹھنے لگے هیں ـ
اللّه هی خیر کرئے 
میں ٹھوڑا سا اور دیکھتا هوں اگر حالات اسی طرح چلتے رہے تو میں بهی کیانی صاحب کی حمایت میں لکھنا شروع کردوں گا 
اور کیانی صاحب زندھ باد کے نعرے اور ان کی صفعات کے لیے لفظ موضوں کرتا هوں 
گرگ باراں دیدھ قسم کے لوگ چڑهتے سورج کو سلام کرنے والوں کو مرغ باد نما کا رخ نظر ارها ہے که اگلی حکومت پنڈی گے کیانیوں کی هوگی ـ
کیانی صاحب کی فیملی کے ایک کیانی کو میں ذاتی طور پر جانتا هوں جو که اتنے مغرور هیں که کسی عام بندے کو اس کے منه پر هی کہنے لگتے هیں که 
ہم تھرڈ پرسن کو منه هی نہیں لگایا کرتے 
اس سے اپ اندازه لگا لیں که حکمرانی ملنے پر ان کیانی صاحب کا کیا رویه هوگا جی 
بلڈی سویلینکے ساتھ؟؟

کوئی تبصرے نہیں:

Popular Posts