اتوار، 25 اکتوبر، 2009

دہشت گرد پکڑا گیا

پنجابی کا ایک محاورھ ہے که پڑوسیوں کے منه پر اگر لالی ہے تو اپنا منه پیٹ کر لال کرلو

پاکستان کا ماحول کچھ اس طرح کا بن گيا هے که بچوں کی طرح ایک ایک دوسرے کو نیچا دیکھانا ، اپنے نمبر بنانے کے لیے اسے ایسے احمقانه کام کیے جارهےهیں که جی ہاسا هی نکل جاتا هے

یه جی اسلام کی آبادی کے دعوے دار شہر جس میں اسلام کو نماز بھی بندوقوں کی چھاؤں میں پڑھنی پڑتی ہے

اسلام اباد کی پولیس نے ایک دہشت گرد کو پکڑ لیا هے بمع بارود بھری جیکٹ کے

اور جی تصویر میں دیکھں که پولیس والے اس کو کیسے ٹریٹ کررهے هیں جیسے ان تھیلوں میں آٹا هو

باباجی کی عمر دیکھو

آٹے کی مقدار دیکھو جی اتنا وزن اٹھا سکتے هیں بابا جی

اور پھر پولیس کی پھرتیاں دہشت گرد پکڑ لیا ؟

دہشت گرد اگر اصلی هوتا تو پھٹ ناں جاتا ؟

کیا کیا ڈرامے هو رهے هیں جی ؟



اور ایک بل پر شور مچایا هوا هے جی

که

سخی لوگ پروگریس رپورٹ مانگتے هیں

او جی دنیا بھر میں ایک هی تو ادارھ ہے جس کا آڈٹ هی نہیں هوتا

جی هاں دنیا بھر میں واحد اور اپنی مثال اپ

اب سکول بھی بند ، تعلیم کا سلسله بند

قوم کی " وھ" هی بند کردو جی

جس تعلیم نے رحمان ملک ولد فیروز نائی کو وزیر داخله بنایا

قوم کے تیس مار خان

تیس مکھیاں مار کر شیخی بکھارنے والے یه کون سا دہشت گرد ہے جو تصویر میں خود دهشت زدھ نظر آرها ہے

شکر هے جی پاکستان کی فوج بڑی چنگی هے ورنه پته نهیں ملک کا کیا بنتا


اتوار، 18 اکتوبر، 2009

بہن پہلوان

وھ کسی کے ساتھ پنگا لیتا هی نهیں هے ، بس لشکے پشکے کپڑے پہنے منه میں پان دبائے گلائیوں میں موتیے کے کجرے پہنے "اس بازار" میں اکڑ اکڑ کر چل رها هوتا ہے

اور اگر کوئی بندھ اس سے پنگا لے لے تو پھر پنگا لینے والے کو پته چل جاتا هے که اس نے پاکستان کے سب سے طاقتوربندے سے پنگا لے لیا لے

آپ سمجھ چکے هوں کے میں مامے مودے کی بات کر رها هوں ـ

ماما مودا بہنوں کی کمائی کھاتا ہو بھانجیوں کو چلاتا هے اور اس کی بہنوں کے گلائنٹ اگر کوئی مسئله هوجائے تو مامے مودے کی اتنی حمایت کرتے هیں که جی بس کچھ ناں پوچھیے

پہنوں کو بيچنا اور ان کو چلانا مودے کا خاندان پیشه ہے اس لیے اس کو کنجر کہلوانے میں کوئی شرم نهیں هے

لیکن که مامے مودے کا یه اصول هے که اپنی بہنوں کو یا بھانجیوں کو خود استعمال نهیں کرتا ہے جیسا که اچھو پہن بہلوان عرف اچھو پيہنا والا کرتا ہے ـ

اچھو کو فتوحات کا بڑا شوق هے لیکن هے بزدل اس لیے آگر کسی پڑوسی کو چھیڑے تو جی پڑوسی سے مار پڑنے کا پکا امکان ہے

اور آپنی هوا بھی اکھڑ جائے گی که اچھو کو مار پڑی ، اس لیے اچھو گھر میں هی کام چلا لیتا ہے

جس طرح کچھ ملکوں کی فوجیں کرتی هیں که دشمن کی ایک انچ جگه فتح نهیں کی هوتی لیکن اپنے ملک کو روز فتح کرتی هیں

بس بندھ کنجر هو تو هو لیکن بہن پہلوان ناں هو جی اچھو کی طرح ، اور خدا کسی ملک کو اچھو جیسی فوج بھی ناں دے دے

که گھر میں هی فتوحات کا شوق پورا کرتی رهیں ، سارے رقبے میرے لیے سارے پلاٹ میرے لیے سارے لوگ شر پسند میں صرف پاک ، احساس

لاطینی امریکه کےکچھ ممالک کی افواج اور افریقی کچھ ممالک کی افواج ایسی هیں که ان کا پڑھ کر ان ممالک پر ترس آتا ہے

اچھی بات ہے که جی ہمارے پیارے ملک پاکستان کی فوج ایسی نهیں هے ، ورنه جی ہندو اور سکھ همارے عزتیں خراب کردیتے ـ

بے اعتدالی بری عادت ہے

بات شروع کی هے بڑے سنجیدھ صاحب اپنے افضل صاحب نے میرا پاکستان (پاکستان میرا بھی ہے) والوں نے
لیکن جی میں اپنی اس کمزوری کو خود سے بھی چھپاتا رہتا هوں
هر وقت جب بھو وقت ملے انٹرنیٹ پر ہوتے هیں
صبح فجر سے پہلے اٹھ کر جی ایم خاور پر کچھ لکھنا هوتا ہے اس کے لیے کچھ انگریزی اخباروں کا مطالعه بھی ضروری هے
ہلکا سا احساس تو تھا لیکن اج اس بات " پک " هو گیا ہے که جی یه ایک بری عادت هے
اس سے کاروبار بھی متاثر هوتا هے
اور بیوی کی جھڑکیاں بھی سننی پڑتی هیں

انٹرنیٹ پر آپ روزانہ کتنا وقت صرف کرتے ہیں؟
تین سے چار گھنٹے!!-
انٹرنیٹ آپ کے رہن سہن میں کیا تبدیلی لایا ہے؟
یاروں دوستوں سے گیا ، ورزش سے گیا ، کاروبار کی دلچسپی کم هوئی جس کی که اس وقت مجھے سب سے زیادھ ضرورت ہے
کیا انٹرنیٹ نے آپ کی سوشل یا فیملی لائف کو متاثر کیا ہے اور کس طرح؟
میں جو عورت کو کچھ وقعت هی نهیں دیا کرتا تھا اب اس کی باتیں سننی پڑتی هیں که وقت بے وقت کمپیوٹر نے مجھے بے اصول سا بنا دیا هے
اس علت سے جان چھڑانے کی کبھی کوشش کی اور کیسے؟
اب سے کوشش کرتا هوں که احساس هی اب زیادھ هوا ہے اوقات مقرر کرتا هوں اس سے زیادھ وقت نہیں دیا جائے گا جی انٹر نیٹ کو ہان کام کے لیے کمپیوٹر اگر استعمال کیا بھی جائے تو نیٹ نهیں صرف وہی اپلیکیشن جس سے کوئی ڈاکومنٹ بنانا هو
کیا انٹرنیٹ آپ کی آؤٹ ڈور کھیلوں میں رکاوٹ بن چکا ہے؟
بہت زیادھ میں نے صبح کی سیر جھوڑ دی ہے کراٹے کی ورزش کا وقت نهیں هے پیٹ بڑھ گيا هے بابا سا لگنے لگا هوں

منگل، 13 اکتوبر، 2009

جی ایچ کیو پرحمله

آگرآپ عوام کو پاکستان نامی گھر کے مالک مثال کرلیں تو جی اس گھر کی حفاظت پر رکھے تنخواھ دار فوجی اس کے چوکیدار هوں گے
اب جی چوکیدراوں نے کھر پر قبضه هی کرنا شروع کر دیا تو وھ اپنے مشرقی لڑکوں نے ان کو مارا اور گھر سے نکال دیا
اب جی شمالی علاقوں کے منڈے بھی ایسا هی کررهے هیں اور چےکیداروں وهی راگ ہے
چند شر پسند عناصر
مٹھی بھر دہشت گرد
آہنی ھاتھ
اجازت نهیں دیں گے

لو جی خود کو گھر کے مالک لوگ سمجھنے والے لوگ یعنی عوام‪ , ‬ بزبان پاک فوج شر پسند طالبان نے چوکیدراوں کے ہیڈ کواٹر پر حملہ کرکے آپنے چوکیدار لوگوں کو زخمی شخمی کردیا ہے
لو جی ان دونوں میں سے کوئی ایک برا ضرور هے
چاہے پاک فوج چاہے طالبان ( یا جو بھی یه هیں ) اب اس بات کا فیصله تو وھ بندھ ہی کرسکتا ہے جو ياتو اندر کی باتیں جانتا هو
لیکن جی خاور کو نظرآ رها ہے که وھ دن دور نهیں هے جب لوگ مارگله کی پہاڑیوں پر چڑھے جی ایچ کیو اور دوسری استعمار علامت عمارتوں پر دھنا دھن گولے برسا رهے هوں گے
اور ایلٹ لوگ ایسے بھاگیں گے که جیسے ..…………
اور خبروں میں آرها ہے که صرف پانچ لوگ هیں جنہوں نے جی ایچ کیو کو یرغمال بنایا هوا هے
یه حساس ادارے عرف پاک فوج کی عادت ہے که مخالف لوگوں١ کی تعداد کم کرکے بتاتی هے ، لیکن اس سے سوال یه پیدا هوتا ہے که تسیں پنچ بندیاں جوگے وی نئیں اے؟؟
مکتی باھنی والے بھی چند شر پسند تھے
اور طالبان بھی چند شر پسند هیں اور
بلوچ بھی چند شرپسند هیں
صرف ایک آپ هی تو پاک صاف هیں باقی تو سارے ناپاک هیں ناں جی
حساس ادراے کی اصطلاح بھی خوب گھڑی هے کسی نے
ایک بڑی حساس برادری هوا کرتی تھی پنجاب میں جس کی نسل هی ختم هوا جاتی هے
میں تو جی اس برادری کی حمایت میں مہم چلانا چاھتا هوں جیسے که لوگ ختم ہوتے پرندوں کی نسل اور ختم هوتے پودوں کی حفاظت کے لیے چلاتے هیں لیکن جی میں اپنی غریبی سے مجبور هوں
یه برادی تھی مراثی
بڑي حساس هوا کرتی تھی جی ان کو سردی بھی زیادھ لگتی تھی اور گرمی بھی . کھانےکے ذائقے میں بھی بڑی حساس هوا کرتی تھی که نودولتے ان سے کھانے کی " جاچ" سیکھا کرتے تھے
اب سنا ہے که پاکستان میں اس برادری کے لوگ ڈھونڈنے سے بھی نهیں ملتے هیں
اس برادری کی نسل ختم هونے کو کچھ شر پسند لوگ (یاد رهے میں نهیں شر پسند لوگ) سید لوگوں کی افزائیش هونا کہتے هیں
یه حساس ادارھ بھی کچھ اسی طرح کا حساس ہے غالباً ؟ اور جب اس کی نسل نامواقف حالات میں خطرے کا شکار هو گی تو بھی جی بڑی مقدس چیزیں پیدا هو ں گی
جو لوگوں کو بتایا کریں گی که جی
حساس ادارھ اندر سے کیا تھا جس میں صرف میں هی ایک پاک تھا باقی سب ناپاک تھے

سوموار، 5 اکتوبر، 2009

بالغ باتیں

نابالغ معاشرھ کیا ہے نابالغ وھ ہے جو بس بچپن میں هی پھنسا رهے ـ
بہت سے کام هیں جو اگر چودھ پندرھ سال کی عمر سے پہلے کر لیں تو جسمانی اور ذہنی کجی کا باعث بنتے هیں اور اگر اس کے بعد بھی ان کا علم ناں هو تو بھی جسمانی اور ذہنی کجی کا هی باعث بنتے هیں ـ
اور اگر کچھ کام بچپن میں ناں کیے جائیں تو بھی جسمانی اور ذھنی نشونما نهیں هوتی هے جیسے که کھانا کھانا ، پاکستان کے نابالغ معاشرے میں بچے کو کہا جاتا ہے کھاؤ پتر کھاؤ اور جی پتر کھانا شروع کردیتا ہے اور کھائے هی چلے جاتا ہے لیکن اس نابالغ پرورش کو کون بالغ کرے گا که جی پینتیس کی عمر پر جا کر کھانے کو کوانٹیٹی سے زیادھ کوالٹی پر غور کرنا هے اور چالیس کے بعد کھانا کم کھانا ہے ـ
ورنه پھر یا شوگر هو گی کسٹرول هو گا
وھ جی همارے معاشرتی محاورےبھی تو کهتے هیں ناں جی که پہلے بندھ کھانا کھاتا ہے پھر کھانا بندے کو کھاتا ہے
وھ پنجابی کا ایک محاورھ ہو جو که نابالغ معاشرے میں تو فحاشی میں آئے گا لیکن آپ کی معونیت پر غور کریں که کیسے لوگوں کو میٹھے کی نقصانات بتائے جارهے هیں
حلوائی دا ان تے کتے دا ـ ـ
وڑدے سوکھے تے نکلدے اوکھے نیں ـ "ان " پنجابی میں کھانے کو کہتے هیں ، آپ نے دیکھا هی هو گا که حلوائی کا کھانا کیسے اسانی سے حلق کے راستے اندر جا رها هوتا ہو اور پھر جب شوگر بن کے ، کیسٹرول بن کے دل کی بیماریوں کا باعت بنتا هے تو اس کا نکلنا پھر جی کتّے کی پرزے سے بھی مشکل هو تا هے ـ
اسی طرح سیکس کی تعلیم کا بھی هے که اگر بچے کو چودھ سے پہلے کچھ باتوں کا علم هو جائے تو اس کے لیے نقصان دھ ہے لیکن اگر اس کو اس کے بعد بھی معلوم نهیں هو گا تو جی پھر انڈر شیو کے لیے بلیڈ سے پچھ لگا لگا کر وھ هم عمروں میں نہر کے کنارے بٹیرے لڑانے لگتا ہے
تو اس کا مجرم کو هے ؟؟
پاکستان میں اگر لکھاریوں نے لکھا بھی ہے تو
هی اینڈ شی کے معاملات کا هی لکھا ہے
کسی نے هی اینڈ هی کا اور شی اینڈ شی کا نهيں لکھا ہے
اور می اینڈ می کا تو جی کچھ لوگ مذاق میں لکھ هی جاتے هیں ـ
اور یه می اینڈ می والی گیم دونوں جنسیں هی کھیلتی هیں ، هی بھی اور شی بھی ـ
اب جی ، جب لوگ باتوں کو فحاشی کا الزام دیتے هیں تو بچپن سے جنس پر بات کرنے کو جرم جان کر پروان چڑھے لوگ بھی اس کی تائید هی کرتے هیں که ان کو بتایا هی یه گيا هے
پاکستان ميں پروان چڑھے جوانوں کی یه حالت ہے که نوے فیصد نارمل مرد هونےکے باوجود شادی کی رات کسی حکیم کے پاس جاتے هیں ، جو چاہے پانی هی دے دے دوائی کے نام پر اس پر مطعمن هو کر اپنا حق ادا کرنے کے قابل هوتے هیں ـ
میں ان کو کہا کرتا هوں که ایک پاک صاف لڑکی جس کی زندگی کے تم هی پہلے اور اخری مرد هو گے اس کو اپنی طاقت کا مظاھرھ دیکھانے کی بجائے جو تم هو ایسے هی کام کرو ، وھ بیچاری اسی کو طاقت کی انتہا سمجھتی رهے گی ـ
بچه ناں هونے کی وجه سیکس کی تعلیم کی کمی ہے
اور الزام هوتا هے جو عورت پر جو دم کروانے جاتی هے سائیں برکت کمیار سے جو انگلی کی پوروں سے اسکے ننگے پیٹ پر گدگدی نما عمل کرتا ہے جس سے جو ردعمل هوتاهے اس سے پھر سائیں برکت کا بچه وھ خاوند اپنا جان کر پالتا رهتا ہے
باقی فیر سہی

جمعہ، 2 اکتوبر، 2009

موٹا پداں والا

موٹا پداں والاں بقول اس کے اپنے بڑا مشهور کاروباری اور سیاسی بندھ ہے اور لوگوں کے بقول بہت بڑی جوٹھ قسم کی چیز هے
پد بمعنی وھ هوا جو بندے کے نیچے سے نکل جاتی ہے انگریزی میں فراٹ کهتے هیں اور اگر بغیر اواز کے هو تو اس کو پنجابی میں پھوسی کهتے هیں ، وجه تسمیه موٹے کی پداں والا اس لیے هے که یه بندھ پد بہت مارتا هے ، حالانکه اس کے پد مارے اور چوّلیں مارنےکی ایک کی رفتار ہے
کچھ کردار هوتے هیں جن پر لکھا جانا چاھیے که لوگ ان کے شر سے محفوظ رهیں اور کچھ کردار هوتے هیں جن پر لکھا جانا چاھیے که یاد رکھنے کے قابل هوتے هیں ـ
تو جی اج موٹے پدان والے اور یملے پر لکھیں گے جس میں کچھ اور بھی کردار هوں گے
کیا آپ کو معلوم ہے که پنجابی میں جوٹھ قسم کی چیز کس کو کهتے هیں ؟؟
نئیں ناں ؟!!ـ
او جی ، جوٹھ کهتے هیں تھالی میں بچ جانے والے کھانے کو یا اس چیز کو جو کسی نے جوٹھی کر دی هو، اور جوٹھ قسم کا بندھ اس کو کہتے هیں جس کو زمانے بھر نے چکھ چکھ کر جوٹھا کر کے تھوک دیا هو ـ
موٹا پداں والا بڑا بسیار خور بسیار گو بھی ہے
موٹے پداں والے کا کھانے کا انٹرس (منه) تو بڑا ہے هی ان کا ایگزاسٹ بھی بہت بڑا ہے اس لیے لازماً توند (گند فیکٹری) بھی بڑی هی هو گی ـ
اس جوٹھ کی پچھلے دنوں ایک بھٹی معتبر نے نیا نیا جوٹھا کیا ہے اور اب اس جوٹھ سے جان چھڑانا چاھتا ہے لیکن جی موٹا پداں والا لیچڑ بھی ہےبلکل لسوڑے کی گٹھلی کی طرح ، اور بے عزتی پروف اتنا که آپ اس کے سامنے هی اس کی ماں بهن پر ڈنگر چڑھا دو یه مسکراتا رہے ـ
اس موٹا پداں والا کی پچھلے دنوں منڈی میں یملے کے ساتھ منه ماری هو گئی ، اب جی یه یملا بھی وکھری ٹائیپ کی چیز هے دنیا جہاں کے علم حاصل کیے هیں جی اس ، نے سوائے پسے کمانے کے ، ورزشی جسم ، کھانے پینے میں احتیاط ، ٹھاٹھ کا نمازی لیکن کیونکه باتیں جب بھی شروع کرے گا نظریات پر شروع کردے گا جن کی عام لوگوں کو سمجھ هی کم هو گی ، اس لیے لوگ اس کو پیٹھ پیچھے یملا کہتے هیں اور منه پر اس کے سامنے بیٹھ کر منه کھول کھول کر اس کی باتیں سنتے هیں اور پھر سیاسی پارٹیوں ميں ان باتوں کو اپنی تقریروں میں سناتے هیں ـ
اب جی سب بندے اس کو پیٹھ پیچھے یملا بھی کہتے هں لیکن یملے کے نالج کی بھی تعریفیں کرتے هیں کیونکه یملا بھلا مانس ہے اس لیے لوگ اس کو پسند بھی کرتے هیں ـ
لیکن سیانے بننے کوی کوشش میں مصروف بیوقوف لوگ یملے کے ساتھ کسی ناں کسی بات میں سنگ پھنسا کر بیٹھ جائیں گے که کج بحثی میں هی سہی اس کو لاجواب کرکے آس پاس والے لوگ میں کہـ سکیں که جی میں نے تو یملے کو لاجواب کردیا تھا ، میرے پاس بھی بڑا نالج ہے بس میں باتیں کم کرتا هوں ـ
اور یملا ہے که ایسے لوگوں کو بھی سمجھانے کی کوشش میں لگا هوتا ہے
ایک دن یملا هوئے والی والے بادشاھ ٹمبر مرچنٹ مسواک فروش کو کائینات کی ساخت میں وقت کی حثیت بڑی تفصیل سے بتا رها تھا ، بادشاھ کا منه کھلا تھا ور بڑے دھیان سے باتیں سن رها تھا که ماسٹر طفیل کا گزر هوا تو اس نے بادشاھ سے پوچھا کیا تم کو یملے( یملے کا اصل نام لے کر )کی باتوں کی سمجھ آ رهی ہے ؟؟
نئیں!!ـ
نئیں سمجھ تے نئیں آ رهی مگر جی یملا بات کر رها ہے تو جی اس لیےهو گی بڑی عقل کی بات ، اس لیے میں سن رها هوں
اس یملے کی پتلیں گرم کردییں جی پچھلے دنوں موٹے پدان والے نےـ
پتلیں گرم کرنا سمجھتے هیں آپ؟؟
او جی جن مشینوں کی شافٹ میں میگنٹ بننے کی وجه سے بیرنگ نهیں لگایا جاسکتا وھاں پیتل کی نیم گول پیکنگ رکھ جاتی هے جو نامواقف حالات میں گرم بھی هوجاتی هیں
اس لیے پنجابی میں مکینک لوگ کسی کو غصے میں دیکھ کر کهتے هیں اس کی پتلیں گرم هو گئی هیں ـ
یملے کی پتلیں گرم هونے کی وج یه تھی که یہاں ایک فراڈی لوگوں کا ٹولی هے جو ایک سود خور کے ڈیرے پر رهتے هیں اور اس سے سود پر رقم لےکر کاروبار کرتے هیں ، یه ٹولی زیادھ هی جھوٹی اور دھوکے باز ہے اس ٹولی میں شامل دو بھائیوں نے منتں کرکر کے یملے کو کجھ مشینں فروخت کر دیں جن میں یملے نے نقصان اٹھایا لیکن ایک مشین جو که خراب ہے اس پر یملے کی سوئی اٹک گئی که یه مشین واپس لو اور پیسے واپس دو
اور اس مشن کی واپسی میں آئیں بائیں کرتے ان کو ایک سال سے اوپر هو گیا هے ،
یملا ساری بات کو سمجھتے بوجھتے اپنی بھل مانسی کی وجه سے ان کو اہست آہست کہتا رهتا ہے که بندے بنو اور پسے واپس کرو یه ناں هو که میں حرکت میں آ جاؤں تو تمهارا تو ویزھ بھی کمپنی کا ہے پھر ساری زندگی روتے رهو گے
موٹے پداں والے نے یه بات سن کر جج بننے کی کوشش ميں دخل اندازی شروع کر دی یملے کو سمجھ لگ گئی که پداں والا اپنی کمینگی کی وجه سے فراڈیوں کا ساتھ دے گا لیکن جی پداں والا پھدک پھدک کر شروع هو گیا که جی جس بندے نے یملے کو فراڈ لگا لیا ہے وھ جی گریٹ بندھ ہے
وھ یملے سے زیادھ عقل مند ہے
یملا کہنے لگا اور اوئے موٹے پداں والے میں نے کب اپنے اپ کو عقل مند کہا ہے اوئے ؟؟
پنداں والا تو جی چیخ چیخ کر فراڈیے کو عقل مند ثابت کرنے لگا ور یملا تھا که شرمندھ هو رها تھا که لوکو میں عقلمد نهیں هوں ـ
لیکن فراڈیه کو فراڈیه کہو عقلمند ناں کہو ـ
بس جی بھر یملے کی پتلیں گرم هو گئیں
اور جب یملے نے موٹے پداں والے کو کہا که
اؤئے تم کو کس بہن کی بغل میں تیر لینے والے نے کہا ہے که یملا عقل مند کہلواتا هے ؟؟ اوئے سارے لوگ مینوں یملا نهیں کہندے ؟؟
پداں والا کہنے لگا تم غیر پارلیمانی زبان استعمال کررهے هو
کون سی پارلیمنٹ؟
اوئے تمہاری ـ ـ ـ کی پارلیمنٹ تو سیٹی کی زبان میں بات کرتی ہے
پداں والے کے تو جی پد نکل رهے تھے اور سب لوگوں کی طرف منه کرکے کہتا ہے که دیکھو یه یملا کون سی زبان استعمال کررها هے
سبھی معتبر لوگ پداں والے کو کہتے هیں که تم بڑے چوّل بات کر رهے هو یملا ٹھیک ہے باز آ جاؤ
پداں والا کهتا هے !!ـ او جی اس کی زبان ؟؟!ـ تو یعقوب نے کها
اور موٹے!!ـ یملے کو ساری زبانیں آتی هیں جب یملے کی پیتلیں گرم کرو گے تو یملا پنجابی کی گالیوں کو بھی نئی طرح دے کر گالیان دے گا ناں
اوئے موٹے کس بهن کی بغل میں تیر لینے نے تجھے جج مقرر کیا هے ؟؟
چل نکل یہاں سے ورنه میں کمہاروں کے ڈنگروں کے تمهاری خواتین سے رشتے بتانے لگوں گا
پاس کھڑے لوگوں کا یملے کی گالیان سن کا ہاسا نکل رها تھا
پداں والا کوئی اکسٹرا جوٹھ چیز هے
لیکن یملے ن اس کو بے عزت کرکے اپنی جان چھرائی ، اب جی لوگ چسکے لینے کے لیے یملے سے اس معاملے کی تفصلات پوجھتے هیں اور یملے کے انداز بیاں سے لطف لیتے هیں ـ
جمعے کی نماز پڑھ کر باهر نکلے تو پھر یملے کو لوگوں نے گھیر لیا
که پنداں والے سے کیا هوا
تو جی یملا کہانی سنانے لگا
که یہاں جاپان میں ایک ملک پانی کا بلبله ہے اس نے مجھے پرانے زمانے میں ایک بندے کی بابت بتایا تھا که وھ بندھ جس فیکٹری ميں کام لگا تھا اس کے مالک (ساچو ) کی بیوی کو ورغلا کر لے بھاگا ـ
تو مجھے بڑا افسوس هوا تھا که کتنا احسان فراموش بندھ ہے که جس ساچو نے اس کو سہارا دیا اسی کا گھر اجاڑ دیا ـ
ویزے کے لیے کوئی اور عورت بھی تو تلاش کی جا سکتی تھی ، اس لیے میں نے جاپان میں ایک تو اُس بندے کو کمینه جانا تھا یا پھر اج اس موٹے پداں والے کو ایکسٹرا جوٹھ پایا ہے
تو یملے کی یه بات سن کر مولوی صاحب کا هاسا نکل گیا اور بتانے لگے که
یار جی یه دونوں بندے ایک هی بندھ هیں یه پداں والا هی تھا جو ساچو کی بیوی کو بمع ایک بڑي رقم کے لے کر فرار هو گیا تھا
مولوی صاحب کا یه انکشاف سن کر یملے کو اپنے یملے هونے کا بڑی شدّت سے احساس هوا

Popular Posts